Revelations about Shahbaz Gills Adiala Jail

شہباز گِل کے اڈیالہ جیل سے متعلق انکشافات

eAwaz پاکستان

پاکستان تحریکِ انصاف کے رہنما شہباز گِل نے اڈیالہ جیل سے متعلق انکشافات کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہاں پولیس کے آنے پر قیدی کو نظریں نیچے کرنے کے احکامات ہیں، جیل میں 50 سے زائد ذہنی مریض موجود ہیں۔

اسلام آباد کی کچہری میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ جیل ریفارمز ضرور ہونے چاہئیں جو سیاستدانوں نے ہی کرنی ہیں۔

شہباز گِل نے کہا ہے کہ مجھے آپ زیادہ تر مولا جٹ ہی جانتے اور سمجھتے ہیں۔

اس موقع پر صحافی نے شہباز گِل سے سوال کیا کہ جیل میں آپ پر تشدد ہوا، اس کا مقدمہ درج کروائیں گے؟

جواب میں شہباز گِل نے کہا کہ میرے وکلاء جو کہیں گے اس کے مطابق چلوں گا۔

شہباز گِل کا کہنا ہے کہ کیس پر ہائی کورٹ کے واضح احکامات ہیں کہ بات نہیں کرنی، میرے کیس میں اپنی مرضی سے باتوں کو رنگ دیا گیا۔

انہوں نے مزید کہا کہ میں نے امریکا کی دوسری بڑی یونیورسٹی میں ایک دہائی سے زیادہ بطور پروفیسر پڑھایا، امریکا میں نوکری ہونا ہر کسی کا خواب ہوتا ہے۔

واضح رہے کہ آج صبح شہباز گِل بغاوت پر اکسانے کے کیس کی سماعت کے موقع پر عدالت میں پیش ہوئے تھے۔